سی پی او فیصل آباد کی کرائم میٹنگ



سٹی پولیس آفیسر فیصل آباد افضال احمد کوثر نے مدینہ ڈویژن میں تعینات پولیس افسران کی کارکردگی کا جائزہ لینے کیلئے کرائم میٹنگ کی ۔میٹنگ میں ایس ایس پی آپریشنز عرفان اللہ خان، ایس ایس پی انوسٹی گیشن ڈاکٹر فرخ رضا ،ایس پی مدینہ ڈویژن ملک جمیل ظفر،ایس ڈی پی اوپیپلزکالونی ناصر محمود ،ایس ڈی پی او سرگودھا روڈ احمد نواز شاہ،ایس ڈی پی اواحسان اللہ، ایس ایچ او ز صاحبان اور تفتیشی افسران نے شرکت کی ۔ سی پی او فیصل آباد نے ناقص کارکردگی پر تھانہ پیپلز کالونی کے انسپکٹر عابد ہومی سائیڈ کو شوکاز نوٹس ،سب انسپکٹر شفقت جاوید کی تنزلی کرتے ہوئے اے ایس آئی کر دیا ،اے ایس آئی محمدانور کو دوسال کیلئے ہیڈ کانسٹیبل کردیا،اے ایس آئی ذوالفقار علی کو شوکاز نوٹس ،اے ایس آئی محمد وارث کو شوکاز نوٹس ،تھانہ مدینہ ٹاؤن سے ایس ایچ او مدینہ ٹاؤن سب انسپکٹر مسعود حشمت کو شوکاز نوٹس ، اے ایس آئی محمداسلم کو شوکاز نوٹس ،تھانہ سرگودھا روڈ سے سب انسپکٹر عبدالرحمان کو شوکازنوٹس ،انسپکٹر عبدالستار کو شوکا زنوٹس ،اے ایس آئی محمد اسلم کو شوکاز نوٹس ، تھانہ نشاط آبا د سے اے ایس آئی مختار احمد کوشوکاز نوٹس ،اے ایس آئی احد حسین کو شوکاز نوٹس،تھانہ ملت ٹاؤن سے سب انسپکٹر محمد خالد کو شوکاز،اے ایس آئی مقصود احمد کو شوکاز ،اے ایس آئی نذر حسین کو شوکاز ،اے ایس آئی عطا ء محمد کوشوکاز نوٹس ،تھانہ چک جھمرہ سے سب انسپکٹر محمد خالد کو شوکاز ،اے ایس آئی محمد اسلم کو شوکاز ،تھانہ ساہیانوالہ سے سب انسپکٹر ثناء اللہ کو تنخواہ میں دو دفعہ کٹوتی اور ایک سال سروس ضبط ،انسپکٹر ظفر اقبال ہومی سائیڈ کو شوکاز نوٹسز جاری کیے ۔ اسی طرح اچھی کارکردگی دکھانے پر انہوں نے تھانہ پیپلز کالونی سے سب انسپکٹر سرفراز احمد کو CCII ،اے ایس آئی عمران کو CCII اور 10000روپے ، اے ایس آئی سجاد احمد کوCCII ،ایس ایچ او تھانہ سرگودھا وڈسب انسپکٹر ارم رضا شاہ معہ ٹی اے ایس آئی ثاقب کو 10000روپے اورCCII،تھانہ منصورہ آبادسے اے ایس آئی پناہ محمد کو5000روپے CCII،تھانہ نشاط آباد سب انسپکٹر محمد علی 5000روپے اورCCII ،اے ایس آئی ارشد قدیر کو5000روپے اور CCII، تھانہ چک جھمرہ سے اے ایس آئی خالد حسین 10000روپے اور CCII تعریفی سرٹیفکیٹ دینے کا اعلان کیا ۔ آخر میں سی پی و فیصل آباد نے شرکاء کو آئندہ میٹنگ تک تمام پرانے مقدمات کو یکسوکرنےکا حکم دیا ۔انہوں نے کہا ڈکیتی رابری ،راہزنی کے مقدمات کی تفتیش کو اولین ترجیح پر حل کریں ۔ اگر کسی بیٹ میں جواء یا منشیات فروشی کی کوئی شکایات میرے سامنے آئی تو میں متعلقہ ایس ایچ او کے ساتھ ساتھ متعلقہ بیٹ افسر کے خلاف سخت محکمانہ ایکشن لوں گا۔