سی پی او فیصل آباد کی کرائم میٹنگ



سٹی پولیس آفیسر فیصل آباد افضال احمد کوثر نے صدر ڈویژن میں تعینات پولیس افسران کی کارکردگی کا جائزہ لینے کیلئے کرائم میٹنگ کی ۔میٹنگ میں ایس پی صدر ڈویژن محمد ممتاز رانا ،ایس ڈی پی اوسمندری شاہد حسین،ایس ڈی پی اوتاندلیانوالہ عصر علی، ایس ایچ او ز صاحبان اور تفتیشی افسران نے شرکت کی ۔ سی پی او فیصل آباد نے فرداًفرداً تمام تفتیشی افسران کی کارکردگی کا جائزہ لیا اور ناقص کارکردگی پر تھانہ صدر تاندلیانوالہ کے سب انسپکٹر تجمل حسین ،اے ایس آئی فریاد،تھانہ سٹی تاندلیانوالہ کے اے ایس آئی ظفر اقبال،اے ایس آئی نواز،تھانہ کُر کے اے ایس آئی اعجاز،اے ایس آئی اسلم صابری ،انسپکٹر اعجاز،اے ایس آئی عارف حسین ،تھانہ صدر سمندری کے ایس ایچ او سب انسپکٹر محمد یوسف،اے ایس آئی فیاض،تھانہ سٹی سمندری کے ایس ایچ او سب انسپکٹر آفتاب عالم اور تھانہ ترکھانی کے اے ایس آئی عثمان کو شوکاز نوٹسز دینے کا احکامات جاری کیے گئے ۔ اسی طرح اچھی کارکردگی دکھانے پرتھانہ گڑھ کے سب انسپکٹر طالب حسین کو 5000روپے ،اے ایس آئی اخترحسین کو3000روپے ،تھانہ ماموں کانجن کے اے ایس آئی عاشق کو7000روپے ،تھانہ مرید والا کے اے ایس آئی عباس کو5000روپے ،اے ایس آئی عاشق علی کو3000روپے ،اے ایس آئی ارشد علی کو 3000روپے ،تھانہ صدر تاندلیانوالہ کے سب انسپکٹر امانت علی کو5000روپے او ر CCII سرٹیفکیٹ دینے کا اعلان کیا ۔ اس کے بعد سی پی او فیصل آباد نے پولیس افسران کے مسائل سنے ۔ تھانہ ترکھانی کے اے ایس آئی عبدالرزاق نے سی پی او کو اپنی بیماری کے متعلق آگاہ کیا توسی پی او نے ان کا علاج سرکاری خرچہ پر کروانے اور اس کا تبادلہ گھر کے نزدیک کرنے کے احکامات صادر کیے ۔ اسی طرح سی پی او فیصل آباد نے تھانہ مرید والا کے اے ایس آئی محمدارشد کو فالج کے علاج کیلئے 10000 روپے دینے کا اعلان کیا۔ آخر میں سی پی و فیصل آباد نے شرکاء کو آئندہ میٹنگ تک تمام پرانے مقدمات کو یکسوکرنےکا حکم دیا ۔انہوں نے کہا ڈکیتی رابری ،راہزنی کے مقدمات کی تفتیش کو اولین ترجیح پر حل کریں ۔ اگر کسی بیٹ میں جواء یا منشیات فروشی کی کوئی شکایات میرے سامنے آئی تو میں متعلقہ ایس ایچ او کے ساتھ ساتھ متعلقہ بیٹ افسر کے خلاف سخت محکمانہ ایکشن لوں گا۔